1

“میرے شہر میں میری نسل کو لوٹنے والو”

تحریر : عیشتہ الراضیہ(گجرات)

میرے شہر میں میری نسل کو لوٹنے والو!!!
پتا ہے کس طرح بیٹے جوان ہوتے ہیں!!!
معصوم شہداء۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ آرمی پبلک سکول پشاور کے ہونہار اور محنتی طالب علم۔۔۔۔۔۔۔۔بہت شوق سے صبح تیار ہوکے سکول گئے ہوں گے “آج تو پارٹی ہے” سب نے رنگ برنگ کپڑے پہنے ہونگے۔رنگ برنگے پھولوں کی طرح۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کچھ طالب علم، مستقبل کے معمار بھرپور تیاری کے ساتھ امتحان گاہ میں پہنچے ہونگے۔کیا پتا تھا ان کو کہ یہ ان کی زندگی کا آخری امتحان ہے۔کیا پتا تھا ان پھولوں کو کہ آج آخری دفعہ دنیا میں تیار ہو رہے اس کے بعد صرف کفن پہننا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
کیا قصور تھا ان معصوم جانوں کا؟؟ کیا گناہ سرزد ہوا تھا ان کلیوں سے؟؟کتنے خواب ہوں گے جو آنکھوں میں سجائے سکول کی طرف روانہ ہوئے ہوں گے۔۔۔کتنی مائیں ہیں جو ساری آس ،ساری امید اپنے ان بیٹوں سے وابستہ کیے ہونگی۔۔۔۔۔۔کہ بیٹا جس کو اتنی مشکلوں سے پالا وہ اپنے پاؤں پر کھڑا ہو گا تو ضعیف باپ کا سہارا بنے گا۔۔۔۔سارے خواب بکھر گئے۔۔خواہشیں دم توڑ گئیں۔۔۔۔
ماں کس کو پیار کرے گی؟؟؟؟کس کا سر چومے گی؟؟؟بہن کس سے فرمائیشیں کرے گی؟؟کس کے ساتھ شرارتیں کرے گی؟؟؟باپ کس سے اپنی خواہشات وابستہ کرےگا؟؟سب کچھ ہی تو ختم ہو گیا۔۔
کتنے گھر اجڑ گئے۔۔کتنی مائیں اپنے بیٹوں سے ہاتھ دھو بیٹھیں “کاش! میں نے آج بچے کو سکول نہ بھیجا ہوتا۔۔۔۔کاش بچے نے آج چھٹی کی فرمائش کی ہوتی۔۔۔کاش میں یہ منظر دیکھنے سے پہلے ہی مر گئی ہوتی” کتنی ہی ماؤں کے دل میں یہ کاش ابھرا ہو گا۔۔۔
اس دن کے لیے پالا تھا۔۔۔اتنا خرچ کیا تھا کہ اپنے ملک ہی میں میرا بچہ محفوظ نہیں رہا اس پاک وطن کے حکمرانوں کی نااہلی کی وجہ سے آج اتنے بچے زندگیوں سے ہاتھ دھو بیٹھے۔۔۔۔۔کیسے ازالہ کریں گے اتنی جانوں کا۔۔۔۔اتنے دماغ۔۔۔۔کیا جانو تم کہ ان ذہنوں سے تمارا ملک کہاں پہنچ سکتا تھا؟؟؟
صرف بیانات دینے سے کچھ نہیں ہوگا۔۔۔تسلیاں دینے سے ملک کے حالات نہیں بدلیں گے۔۔کچھ ایسا کرنا ہو گا کہ جس سے آج کے بعد کسی ماں کا لعل ،باپ کا سہارا،بہنوں کے محآفظ یوں دہشت گردی کی بھینٹ نہ چڑھیں۔۔۔وزیراعظم صاحب! خدا کے لیے کچھ تو کیجیے۔۔۔۔خدا کے لیے امریکہ جیسے دھوکے باز ملک سے تعلقات بہتر کرنے کی بجائے قرآن کے ساتھ تعلق مضبوط کریں۔۔۔۔
کیا اتنے معصوم بچوں کا لہو بھی آپ کا دل نہیں بدل سکا؟؟؟؟اگر اب نہیں تو پھر کب؟؟؟

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں