اتنی نہ بڑھا پاکئی داماں کی حکایت !!!!!

امیرِجماعت اسلامی پاکستان سید منور حسن کا معروف صحافی سلیم صافی کے پروگرام “جرگہ” میں دیے گئے جواب کے رد عمل میں آیا ہوا
آئی ایس پی آر کا بیان ۔۔۔۔۔ یہ بیان جس موقع پر اور جس طریقے سے وارد ہوااسے سمجھنا کوئی مشکل بات نہیں کہ یہ بیان کس فیکٹری میں تیار کیا گیا اور کہاں سے آیا ۔۔۔!!
مگر حیرانی کی بات تو یہ ہیکہ  سید صاحب نے جو سوال پوچھا اسکا جواب تو کسی نے بھی نہیں دیا۔

بھائی یہی کہا تھا نا انہوں نےکہ ۔۔۔۔

“جو جس کے لشکر میں شامل ہو کر لڑے گا وہ ویسا ہی کہلائے گا نا”

تو اس میں کیا غلط تھا ؟؟

!!کوئی یہ کہے کہ میں جنگ تو کروں دشمن کے لشکر کے ساتھ مگر جب مر جاوں تو تمغے دوسری طرف سے پاوں ۔۔۔۔!!

بات تو عمران خان بھی اسمبلی میں کھڑے ہوکر کہہ چکے ہیں کہ ہماری فوج غیروں کی جنگ میں اپنوں کا خون بہا رہی ہے ۔۔۔۔۔ یہ بات تو ملک کا بچہ بچہ کہتا ہے ۔۔۔ پھر منور صاحب کی بات پر ہی اتنا واویلا کیوں ؟؟؟

حیرت تو اس بات پر کہ معافی کا مطالبہ بھی کس کی جانب سے آیا کہ جن کی اپنی پوری تاریخ معافیوں کے قرض سے بھری ہوئی ہے !!

معافی کا مطالبہ کرنے والے ذرا اپنے گریبانوں میں جھانکیں ۔۔۔۔ اور اس بات کا جواب بھی ذرا اس قوم کو دے دیں کہ

قوم سے معافی کس کس نے مانگی ہے ؟؟

ہر اس جرنیل نے جس نے ملک کا آئیں توڑا ؟؟

اپنا اٹھایا ہوا پہلے دن کا حلف توڑا ؟؟ْ

یا
جنہوں نے ملک توڑا ؟
یا
جنہوں نے ہتھیار ڈالے ہزاروں فوجیوں کو قید کروا کر ؟
یا
جنہوں نے قوم کی بیٹی اور بیٹوں کوچند ٹکوں کے عوض سر عام نیلام کر دیا ؟؟
یا
جنہوں نے ملک کے ایک ایک اہم ہوائی اڈے کو بیچ دیا ڈالروں کے عوض ؟؟؟
یا
جنہوں نے اپنے ہی ملک کو غیروں کی چراگاہ بنادیا ؟؟؟
یا
جنہوں نے اپنو ں پر ڈرون گرواے ؟؟؟
یا
جنہوں نے ہنسے بستے گھروں کو قبرستان میں بدل دیا ؟؟؟

کون مانگے قوم سے معافی ؟؟؟

معافی کا مطالبی کرنے والے کیا مطلب جانتے ہیں معافی کا ؟؟؟

اتنی نہ بڑھا پاکی داماں کی حکایت !!

آج یہ مطالبہ کرنے والے بھول گئے کہ پاکستان کے وجود میں آنے سے لیکر آج تک کس کی قربانیاں سب سے زیادہ ہیں ؟؟؟

کون تھا جو اسی ملک کو ٹوٹنے سے بچانے کی خاطر اس فوج کا بازو بنا اور
مشرقی پاکستان میں مکتی باہنی کے غنڈوں کے ہاتھوں اذیت ناک تسدد کا شکار ہوا ؟؟؟

جو ہم نہیں تھے تو پھر کون تھا سرِ بازار
جو کہہ رہا تھا کہ بکنا ہمیں گوارا نہیں

ملک اور فوج سے وفاداری کی وہ سزا آج تک کبھی پھانسی اور عمر قید کی سزاوں کی صورت میں کاٹ رہے ہیں
تو کبھی نہتے نمازیوں کو بھونتی ہوئی گولیوں کی صورت میں ۔۔۔۔ !!

کون ہے جو اسی فوج کے شانہ بشانہ افغان جہاد میں لڑتا رہا کس نے اپنے جوانوں کی لاشیں کشمیر میں فوج کے جوانوں کے ساتھ اٹھائیں ۔۔۔

جرنیل صاحب بہت معذرت مگر کبھی یہ معافی کا مطالبہ اس وقت کیوں نہیں آتا جب کھلے عام فوج کو گالیاں دی جاتیں ہیں منہ کھول کھول کہ ملک توڑنے کی دھمکیاں دی جاتی ہیں ۔۔۔ یہ سب آپ ٹھنڈے پیٹوں برداشت کر لیتے ہیں ۔۔۔۔۔۔

مگر آج ایک حقیقت پر مبنی بات پر اتنا شور کیسے ؟؟ْ

فوج ایک انتہائی ذمہ دار محکمہ ہے اور اس وقت جب کہ ملک ویسے ہی بڑے عرصے سے ایک انتشار کا شکار ہےایسے بیانات سے گریز کرنا چایے ۔۔۔۔ !!
کہ ملک ایسے وقت میں مزید غلطیوں کا متحمل نہیں ہوسکتا ۔۔۔ اپنی غلطیوں سے سبق سیکھنا چاہیے نا کہ دوسروں کو بھی اس میں ملوث کرنے کی کوشش !!

5 Comments
  1. 11 November, 2013
    Abdullah

    ماشاءاللہ

    Reply
    • 11 November, 2013
      gas
      munwar ny such kaha hai
      Reply
  2. 11 November, 2013
    Waqas Hussain

    اس کالم میں بہت تلخ حقائق بیان کئےگئے ہیں، جماعت اسلامی ہمیشہ فوج کے شانہ بشانہ گھڑی رہی ہے۔ لیکن وہ میڈیا جو ہر وقت فوج کے خلاف بولتا ہے اسے تو ائی ایس پی آر برداشت کر رہی ہے اور ان دہشت گردوں سے معافی کا مطا لبہ نہیں کر رہی جو امریکہ، یورپ اور بھارت میں بیٹھ کر پاکستان کو بانٹنے کی سازیشیں کر رہے ہیں، اور نہ ہی انھیں پاکستان کے حوالے کرنے کا مطالبہ کر رہی ہے۔ اس بیان میں مذہبی اور سیاسی پہلو شامل ہے اور یہ آپ کے پچھلے کالم جس میں آپ نے سقوط بغداد کی تلخ حقیقت آشکار کی تھی کہ “کوا حلال ہے یا حرام” لگتا ہے فوج بھی اس بحث میںشامل ہو گئی ہے انھیں اس سے کوئی سروکار نہیں کہ آپ کی خودمختاری کو چیلنج کیا گیا ہے لیکن ہاں یہ ذہن میں ضرور ہے کہ “مرنے والا شہید ہے یا ہلاک”میرا خیال ہے کہ آئی ایس پی آر کی جانب سے ایسا بیان نہیں آنا چاہئے تھا ۔”

    Reply
  3. 11 November, 2013
    abdul samad
    bilkol sahi kah raha hu…ya saray america ki ghulam hai…in ki sari batay washinton DC sa ati hai…
    Reply
  4. 11 November, 2013
    Sohail
    Really nice. Spot on!
    Reply

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: