مغربی بنگال اور آسام میں انتخابات‘ پُرتشدد واقعات







آسام/ بنگال: ریاستی سطح پر انتخابات کے دوران پولیس کے ساتھ فوج بھی تعینات ہے

نئی دہلی (انٹرنیشنل ڈیسک) بھارت میں ریاستی انتخابات کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے۔ خبررساں اداروں کے مطابق ریاست مغربی بنگال کے 30 اور آسام کے 47 حلقوں میں ہفتے کی صبح سخت سیکورٹی انتظام کے درمیان پہلے مرحلے کی رائے شماری شروع ہوئی۔ مغربی بنگال کے 30 اسمبلی حلقوں میں مجموعی طور پر 191 امیدواروں نے اپنی قسمت آزمائی۔ ریاست میں 73 لاکھ سے زیادہ ووٹر 10ہزار 288 انتخابی مراکز پر اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے۔ اس موقع پر ان ریاستوں میں پُرتشدد واقعات بھی دیکھنے میں آئے۔ حالات کو دیکھتے ہوئے حکومت نے پولیس کے ساتھ بھاری تعداد میں فوجی بھی تعینات کیے تھے۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق 2019ء میں دوبارہ 5 سال کے لیے منتخب ہونے والے نریندر مودی کی اقتدار پر گرفت کو اگرچہ کوئی خطرہ نہیں ہے، لیکن نئی دہلی کے اطراف کسانوں کے احتجاج کے بعد دونوں مشرقی ریاستوں میں یہ پہلے انتخابات ہیں۔ دونوں ریاستوں میں انتخابات کا یہ پہلا مرحلہ ہے، جن کے نتائج کئی ماہ بعد تک سامنے نہیں آئیں گے۔





اپنا تبصرہ بھیجیں