آئیڈیل پیرنٹنگ کیسے کریں؟ – محمد اسعد الدین




ڈئیر پیرنٹس!!! آپ اپنے بچے کی آئیڈیل پیرنٹنگ کرناچاہتے ہیں ناں؟؟ بس پھر زبان کو دیجئے rest اور آنکھوں میں مائیکرواسکوپ ایکٹوکرنے کی ٹیکنک سیکھ لیں، پھر دیکھیں۔۔۔۔بچے آپ کے پیرنٹنگ اسٹائل کو اور آپ اس ٹیکنک کو ہمیشہ یاد رکھیں گے۔ یہ ٹیکنک کیا ہے؟؟ آئیے دیکھتے ہیں ……
بچے صبح سے شام تک بہت سارے کام کرتے ہیں ، کچھ روٹین کے اور کچھ روٹین سے ہٹ کر اور پیرنٹس بچوں کی تمام ایکٹویٹیزکے جواب میں verbal reaction دیتے ہیں . اس کے علاوہ بھی دن بھر کبھی ہدایت ، کبھی نصیحت اور کبھی آرڈر کا سلسلہ چلتا رہتا ہے . لیکن زبان کو دیں rest اور آنکھوں کی مائیکرواسکوپ کو اسٹارٹ کردیں ۔۔۔۔۔ لیکن کیسے ؟؟ اب ذرا توجہ سے سمجھ کرپڑھیئے۔۔۔۔
*اپنے بیٹے یا بیٹی کی روٹین کی ایکٹویٹیز میں سے کچھ کا م منتخب کرلیں،جب بچہ کام کرنے لگے تو اپنی توجہ ادھر ادھر سے ہٹا کر سارا فوکس اس کی طرف کرلیں اور چہرے کے تاثرات کو غور سے بلکہ بہت غور سے دیکھیں اپنے مائنڈ میں ان مناظر کو refresh کرکے سوچیں،شروع میں مشکل ہوگی لیکن دو چار مرتبہ کی پریکٹس سے بات بن جائے گی پھر آہستہ آہستہ آپ کو سمجھ آنے لگے گا۔۔۔۔
*بچے نے کام کیا، اپنی مرضی سے یا آپ کے کہنے پر دباؤ میں آکر۔
*بچے نے کا م دلچسپی کے ساتھ کیا یا ، سر سے بوجھ اتارنے کے انداز میں۔
اب کرنے کے کام نوٹ کرلیں: پیرنٹس فرصت سے کسی پرسکون جگہ بیٹھ کر، سوچتے ہوئے،یادکرتے ہوئے بچے کی اہم ایکٹویٹیزکی لسٹ بنالیں اور ان کے سامنے بچے کے اس وقت کے تاثرات نو ٹ کرلیں …… پھر؟؟ فی الحال یہ پریکٹس شروع کریں ، اگلے کام …. اگلے بلاگ میں

اپنا تبصرہ بھیجیں