Home » وجود زن – ثمينہ عابد
بلاگز

وجود زن – ثمينہ عابد

اب نجانے وہ شمع محفل کيوں بن گئى ہے ؟نجانےبازاروں ،چوراہوں پر وہ آويزاں کيوں ہو گئى ہے؟نجانےوہ ايک پبلک پراپرٹى اوردوسروں کے ہاتھوں ميں اک کھلونا سا کيوں بن گئى ہے ؟ قدرت نے يہ رنگ تو عورت کو نہيں ديے ،يہ گندے اور مٹيالے رنگ ہيں،يہ بدبدے رنگ ہيں ،يہ آنکھوں کو بھلے نہيں لگتے ،يہ اچھے رنگ نہيں ہيں ،يہ ايک عورت کے رنگ نہيں ہو سکتے،يہ ايک عورت کے رنگ ہونے بھى نہيں چائيں،قدرت نے جو رنگ اورروپ بخشے ہيں،عورت اسى رنگ اور روپ ميں اچھى لگتى ہے

وہ کہ جس کے وجود سے تصوير کائنات ميں سب رنگ ہیں ،اسے ہی عورت کہا جاتا ہے .عورت کے سب رنگ بہت ہى پاکيزہ اورخوب صورت ہيں ، کيونکہ يہ رنگ اسے قدرت نے ديے ہيں . قدرت نے عورت کے تخليق ميں خوبصورتى اور نزاکت کے ساتھ ساتھ پاکيزگى اور شرم وحيا کا مادہ بھى رکھا،اور پھر اسے مختلف روپ دے ديے،اور اسکے ہر ہرروپ کو دوسروں کے ليے محترم اور مقدس بنا ديا . تاکہ وہ معاشرے ميں احترام کى نظر سے ديکھى جائے . بيوى ہے تو ، بہترين متاع حيات ہے، اپنى خوبيوں کی وجہ سے اپنے شوہر کے دل کا سکون اور اطمينان ہے ، وہ شوہر کے لیے باعث مسرت ہے ، گویا اس کے دم سے گھر جنت کا گہوارہ ہے ،ماں ہے تو ،جنت کو قدموں تلے ليے بيٹھى ہے ، شفقت و محبت سے اولاد کى پرورش کرتى ہے ، انہيں اچھے اور برے کى تميز سکھاتى ہے ، اپنے بچوں کو دنیا میں جینا سکھاتی ہے ، انہيں جہنم کى طرف جاتا نہيں ديکھ سکتى اس ليے جنت تک پہنچنےکا راستہ بتلاتى ہے ،

بيٹى ہے تو ، رحمت بن کرآئی ہے،اپنے والدين کے ليے باعث سکون و آرام ہے ،اس کے وجود سے گھر بھر ميں روشنى ہے ، اسکى چہکار سے رونق ہے ،بہن ہے تو ، خاندان کی عزت وآبرو ہے ، اپنے بھائيوں کى غيرت ہے ، ان کا مان ہے ،اسى ليے تو اسے سنبھل سنبھل کر قدم اٹھانا پڑتا ہے ،يہ ہيں عورت کے پاک رنگ ،جو قدرت نے اسےبخشيے ہيں ،يہ اچھے اوراصلى رنگ ہيں،

1 Comment

Click here to post a comment