Home » محض احتجاج – افشاں نوید
بلاگز

محض احتجاج – افشاں نوید

بتا دیا گیا تھا کہ یہ یہودو ہنود تمہارے دوست نہیں ہوسکتے۔۔پھر اپنے مفادات کے لیے کیوں ان سے پینگیں بڑھاتے ہو۔ان کا بغض کل بھی ان کے منہ سے جھاگ کی طرح پھوٹا پڑتا تھا اور آج بھی۔۔ان سے تجارت.. انکی گڈ بک میں آنے کی خواہش۔۔انکو فری ٹریڈ زون دینا؟؟؟؟یہ ہمارے دشمنوں کے دوست ہیں۔۔پھر بھی ان سے دوستی کی چاہ رکھنا۔۔کتنے عشرے ہوئے چنار کے اس پار نو لاکھ بوٹ ہماری شہ رگ پر قبضہ کیے ہوئے ہیں۔

وہاں قبریں آباد اور آبادیاں ویران ہو رہی ہیں۔۔اپنی لڑائی سے نکلو تو جانو کہ وہاں”ہندو دیش “بنانے کی تیاریاں آخری مرحلے میں ہیں۔ہندوؤں کو ڈومیسائل دئے جارہے ہیں انکی آباد کاری کے منصوبے اتمام کو پہنچنے کو ہیں۔۔تم آلو پیاز میں ہی لگے رہے۔۔وہاں عوام کو بلڈوزر کرکے زمین پہ قبضہ کرنے کے منصوبے ہیں۔۔آج اس ناپاک جسارت نے ہمیں سبق نہیں دیا کہ دشمن کو دوست نہ سمجھیں۔یہ قدرت کی للکار ہے کہ اپنے مظلوم کشمیری عوام کی پکار پر کان دہریں۔۔روز حشر نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے ہم سے پوچھ لیا کہ میری محبت کا دم بھرتے تھے اور میری مظلوم امت کی فغاں نہ کسی رات تمہیں جگاتی تھی، نہ تمہاری آنکھیں اشک بار ہوتی تھیں۔وہ تو ایک قیدی تھا جس کی رسی سخت ہونے کے باعث آپ نبی مہربان صلی اللہ علیہ وسلم ساری رات نہ سوئے تھے اور علی الصبح ان رسیوں کو ڈھیلا کرنے کا حکم فرمایا تھا۔وہ تو مجرم تھے۔۔جنگی قیدی۔۔۔ہم تو اپنے مسلمان بھائیوں کو عشروں سے نہتے ناموس رسالت صلی اللہ علیہ وسلم کا علم تھامے بھارتی فوج کے ہاتھوں دنیا کی بدترین جیل میں دیکھ رہے ہیں۔۔۔

یہ وقت ہے بیداری کاکسی فیصلے کامحض احتجاج نہیں بلکہ ایسا احتجاج کہ مودی سرکار کشمیر میں بدترین اقدامات سے باز آنے پر مجبور ہو جائے۔۔

Add Comment

Click here to post a comment