Home » سب کچھ کھو کر بھی سب پا لیا – عالیہ عثمان
بلاگز

سب کچھ کھو کر بھی سب پا لیا – عالیہ عثمان

بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح نے فرمایا تھا…..
“پاکستان اسی روز کا قائم ہو گیا تھا جس روز برصغیر کا پہلا شخص مسلمان ہوا تھا۔”

قائداعظم کے اس بیان سے یہ اندازہ ہو جاتا ہے کہ ان کے نزدیک پاکستان کی بنیاد اسلام پر ہے اور قیام پاکستان کے قیام کا سبب دو قومی نظریہ ہے. اسی دو قومی نظریے کی بنیاد پر علامہ اقبال نے برصغیر کے مسلمانوں میں آزادی کی تڑپ پیدا کی اور ان کے ولولے تروتازہ کر دیے. پاکستان میں مدینہ منورہ کے بعد کرہ ارض پر اسلام کے نام پر وجود میں آنے والی پہلی مملکت خداداد ہے۔ پاکستان کا قیام بلاشبہ بیسویں صدی کا عظیم معجزہ ہے. اس عطیہ خداوندی کا جتنا بھی شکر ادا کیا جائے کم ہے. قومیں اپنے نظریات کی بنیاد پرزندہ رہتی ہیں۔ اپنے اخلاق کے تحت نشان منزل کو گم کر دینے والی اور اپنے نظریات کو فراموش کر بیٹھنے والوں کا وجود، کائنات زیادہ دیر تک برداشت نہیں کرتی اور وہ حرف غلط کی طرح مٹا دیئے جاتے ہیں ۔ پاکستان اپنے نظریے کے بغیر ایسے ہی ہے جیسے روح کے بغیر جسم ۔ آئندہ نسلوں کو پیام پاکستان کے اعلی مقاصد عام فہم کرنے اور مملکت خداداد کو ایک اسلامی اور فلاحی ریاست بنانے کے خواب کو شرمندہ تعبیرکرنے کے لیے پاکستان کے حصول کے لیے کی گئی بے مثال قربانیوں کی یاد کو زندہ جاوید رکھنا کتنا ضروری ہے۔

حکیم الامت علامہ اقبال نے جس پاکستان کا خواب دیکھا قائداعظم نے جس پاک سرزمیں کی تعبیرحاصل کرنے کے لیے دن رات ایک کیا اور پھر برصغیر کے لاکھوں مسلمانوں نے اپنا خون پیش کرکے جو زمین کا ٹکڑا حاصل کیا یہ وہی پاکستان ہے یہ وہی پاک سرزمین ہے جس کی سرحد پر پہنچتے ہی لٹے پٹے اور زخموں سے چور مہاجرین وطن کی محبت میں پاک سرزمین پرگر کر اسے چومتے اور اس کی مٹی کو مٹھیوں میں بھر بھر کر اپنی آنکھوں سے لگاتے تھےآزادی کے متوالے اپنے معصوم بچوں کے نیزوں پر جھولتے لاشے ، اپنی عزتوں کو بچانے کے لیے دریا اور کنووں میں چھلانگیں لگاتی بہنیں اور بیٹیاں ۔اور اپنے نوجوان بیٹوں کی خون میں تڑپتی ہوئی لاشیں دیکھنے کے بعدجن میں زندہ رہنے کی امید دم توڑ چکی تھی اب انہیں زندگی پیاری لگ رہی تھی اور وہ بے ساختہ کہہ اٹھے کہ ہم نے بہت کچھ کھو کر بھی سب کچھ پا لیا ہے پاکستان مل گیا ہے تو ہمیں اپنے پیاروں کے بچھڑنے کا کوئی غم نہیں۔ واقعی پاکستان ہمارے پرکھوں کی امانت ہے جنہوں نےاتنی قربانیاں دے کر یہ وطن عزیز حاصل کیا اللہ پاکستان کا حامی و ناصر ہو آمین_

جنون سے اور عشق سے ملتی ہے آزادی
قربانی کی بانہوں میں ملتی ہے آزادی

Add Comment

Click here to post a comment

درد میں سانجھی ساتھ نہیں

درد میں سانجھی ساتھ نہیں آنکھوں میں ویرانی تھی دل بھی میرا شانت نہیں اجلے دن میں نا کھیلی تھی گھور اندھیری رات میں بھی حصہ میں جس کے آتی تھی وہ شاہ میں گدا کہلاتی تھی آنسو پی کے جیتی تھی ذلت کا نشانہ بنتی تھی یا خاک میں زندہ رلتی تھی ہرس و ہوس کا سمبل تھی یا اینٹوں میں چن دی جاتی تھی چند ٹکوں میں بکتی تھی آہ میری بے مایہ تھی سوکھے لبوں پہ مچلتی تھی

威而鋼

以前服用威而鋼,但有效時間僅僅只有4小時,對於在常年在高原的我來說,時間有點太短,所以會考慮犀利士。

  • 犀利士(Cialis),學名他達拉非

犀利士購買

與其他五花八門的壯陽技巧相比,犀利士能在40分鐘內解決性功能勃起障礙問題,並藥效持續36小時。這效果只有犀利士能做到,因為醫療級手術複雜,不可逆,存在安全隱患;植入假體和壓力泵等,使用不便,且有病變的可能。