کورونا میں مبتلا ٹرمپ 72 گھنٹے بعد ہی اسپتال سے فارغ




واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اسپتال سے واپس جا رہے ہیں‘ چھوٹی تصویر وائٹ ہاؤس پہنچنے کی ہے

واشنگٹن (انٹرنیشنل ڈیسک) کورونا وائرس میں مبتلا امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو صحت بہتر ہونے پر اسپتال سے وائٹ ہاؤس منتقل کر دیا گیا۔ وہ ریاست میری لینڈ کے فوجی اسپتال میں 72 گھنٹے تک زیر علاج رہے۔ اسپتال سے روانگی کے وقت انہوں نے کہا کہ وہ ہم دری کرنے پر امریکی عوام کے شکر گزار ہیں۔ وائٹ ہاؤس پہنچنے پر صدر ٹرمپ نے میڈیا کے کیمروں کو دیکھ کر اپنے دونوں انگوٹھے فضا میں بلند کیے اور ماسک بھی اتار دیا۔ بعد میں انہوں نے من پسند مشغلہ جاری رکھتے ہوئے ٹوئٹ کی کہ کورونا وائرس سے خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں اور نہ ہی اسے اپنے اوپر حاوی ہونے دیں۔ انہوں نے بتایاکہ وہ خود کو ایسا محسوس کررہے ہیں،جیسے وہ 20 برس پہلے تھے۔ ٹرمپ نے دعویٰ کیا کہ حکومت نے کورونا وبا کے علاج کے لیے مؤثر ادویہ بنا لی ہیں۔ دوسری جانب ٹرمپ کی انتخابی مہم کے منتظمین کا کہنا ہے کہ ری پبلکن امیدوار 15 اکتوبر کو ہونے والے دوسرے صدارتی مباحثے میں شرکت کی منصوبہ بندی کر رہے ہیں۔ ادھر ٹرمپ کے معالج ڈاکٹر شان کونلی نے میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ ڈاکٹروں نے مشاورت کے بعد صدر کو اسپتال سے فارغ کرنے کا فیصلہ کیا گیا،تاہم وائٹ ہاؤس میں طبی سہولیات موجود ہیں اور ڈاکٹر ہر وقت ان کی نگرانی کے لیے دستیاب ہوں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں