دوسری جنگِ عظیم کا بم ناکارہ بناتے ہوئے پھٹ گیا




وارسا: یورپی ملک پولینڈ میں دوسری جنگِ عظیم کا بم ناکارہ بنانے کے دوران پھٹ گیا، زیرآب ہونے کے باعث دیوہیکل بم سے کوئی جانی یا مالی نقصان نہیں ہوا ہے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق زیرِ آب ورلڈ وار ٹو کا دیوہیکل بم 5400 کلو وزنی تھا، بم کو ناکارہ بنانے کے مشن کے تحت نزدیکی علاقوں میں مقیم 750 افراد کو محفوظ مقام پر منتقل کردیا گیا تھا۔

رپورٹ کے مطابق یہ بم عالمی جنگ دوم کے دوران برطانیہ نے جرمنی کی بحری فوج اور کشتیوں کو نقصان پہنچانے کے لیے سمندر میں گرایا تھا جو گزشتہ سال پولینڈ کے سمندری حدود میں دریافت ہوا، پولینڈ کی بحریہ نے اسے ناکارہ بنانے کے مشن کا آغاز کیا لیکن اس دوران بم پھٹ گیا۔

پولینڈ کی بحری فوج بم کو ناکارہ بنانے کے لیے خصوصی ڈیوائس کا استعمال کررہی تھی لیکن کامیابی سے پہلے ہی بم پھٹ گیا، ملکی بحریہ نے پانی میں بم پھٹنے کے عمل کو بھی ایک طرح سے کامیابی قرار دیا ہے۔

مذکورہ بم کی لمبائی تقریباً 19 فٹ ریکارڈ کی گئی جس کے نصف حصے میں دھماکا خیز مواد موجود تھا، یہ بم 12 میٹر کی گہرائی میں تھا اور صرف اس کا سامنے کا حصہ نظر آرہا تھا۔

خیال رہے کہ برطانوی ایئرفورس نے جنگ میں مخالف کو نقصان پہنچانے کے لیے سمندری حدود میں مذکورہ بموں کی بمباری کی تھی اس دوران جرمنی کی بحری فوج کو شدید نقصان پہنچا تھا۔

Comments

اپنا تبصرہ بھیجیں