مودی سرکار نے مقبوضہ کشمیر کےسب سے زیادہ شائع ہونے والے اخبار ‘کشمیر ٹائمز’ کا آفس سیل کردیا




سری نگر:مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ریاستی دہشت گردی برقرار ہے، مودی سرکار نے  سب سے پرانا اور سب سے زیادہ شائع ہونے والے اخبار کشمیر ٹائمز کا آفس سیل کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں درندہ صفت بھارتی فوج کی جارحیت کا سلسلہ جاری ہے، ضلع شوپیاں میں بھارتی فورسز نے نام نہاد سرچ آپریشن کی آڑ میں کشمیریوں کو نشانہ بنایا ، جس کے نتیجے میں دو کشمیری شہید ہوگئے۔

مودی سرکار نے مقبوضہ کشمیرکا سب سے پرانا اور سب سے زیادہ شائع ہونے والا اخبار کشمیر ٹائمز کا آفس سیل کردیا ہے ، سرینگر میں کشمیر ٹائمز کا آفس سیل کرنے پر سابق وزیراعلی محبوبہ مفتی اور عمر عبد اللہ نے مذمت کی ہے،کشمیر ٹائمز اخبارکو کشمیر کے معاملات کو سمجھنے کے لیے دنیا بھر میں بنیادی اہمیت حاصل ہے۔

دوسری جانب حریت رہنماعبد الحمید لون نے اپنے بیان میں کہا کہ مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی مظالم،اقوام متحدہ خاموش تماشائی بن گئی، شوپیاں ضلع کےملہورہ میں مزید 2 کشمیری نوجوانوں کوشہید کردیا گیا۔

عبد الحمید لون کا کہنا تھا کہ بھارت مقبوضہ کشمیرمیں کشمیریوں کی نسل کشی کررہاہے، مقبوضہ کشمیرمیں اظہار آزادی رائے بھی چھین لی گئی، اقوام عالم مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی مظالم پر اپنی خاموشی توڑیں ، ریاست جموں وکشمیرمیں عوام کی زندگیوں کواجیرن بنادیاگیا ہے۔

Comments

اپنا تبصرہ بھیجیں