کرونا بے قابو، فرانس کا بڑا فیصلہ –




پیرس: فرانس میں کرونا وائرس کی صورت حال ایک بار پھر بے قابو ہو گئی ہے، جس کے باعث ملک میں لاک ڈاؤن نافذ کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق کرونا وائرس وبا کی روک تھام کے لیے فرانس میں ایک بار پھر لاک ڈاؤن کا فیصلہ کر لیا گیا ہے، اس سلسلے میں فرانسیسی حکومت نے اعلان کیا ہے کہ جمعرات کو رات 12 بجے سے لاک ڈاؤن نافذ ہوگا۔

اعلان کے مطابق لاک ڈاؤن میں اسکول اور کالجز کھلے رہیں گے، واضح رہے کہ یہ فرانس میں دوسرا ملک گیر لاک ڈاؤن ہے، جس میں سخت پابندیاں عائد کی گئی ہیں۔

فرانسیسی صحت حکام کا کہنا ہے کہ ملک میں کرونا وبا کی دوسری لہر میں بھی وائرس بے قابو ہو چکا ہے، کیسز تیزی سے بڑھتے جا رہے ہیں اور اموات میں بھی اضافہ ہو چکا ہے۔

صدر میکرون آج شب قوم سے ٹیلی ویژن خطاب کے دوران وائرس کی دوسری لہر سے لڑنے کے لیے حکومت کے اگلے اقدام کا اعلان بھی کریں گے۔ ادھر فرانس کے وزیر داخلہ نے عوام کو خبردار کیا ہے کہ وہ COVID-19 سے متعلق کابینہ کے اجلاس سے قبل ’مشکل فیصلوں‘ کے لیے تیار رہیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران فرانس میں کرونا وائرس کے مزید 523 مریض ہلاک ہو چکے ہیں، جب کہ اس دوران 33 ہزار نئے کیسز سامنے آئے۔

اب تک فرانس میں کرونا سے 35 ہزار 541 مریض ہلاک ہو چکے ہیں جب کہ کیسز کی مجموعی تعداد 11 لاکھ 98 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے۔

Comments

اپنا تبصرہ بھیجیں