جان بوجھ کر کھانسنا بن گیا بڑا جرم، اب ہوگی 2 سال قید کی سزا




برطانیہ میں بھی کورونا وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے جہاں ہر 10 میں سے ایک شخص کورونا کا شکار ہوچکا ہے جب کہ حالات کو دیکھتے ہوئے ملک بھر میں جان بوجھ کرکھانسنا بھی جرم قرار دے دیا گیا ہے۔

برطانوی میڈیا کے مطابق خود کو کورونا کا مریض ظاہر کرکے طبی عملے پرکھانسنے والےشخص کو 2 سال قید ہوگی۔

ایمپئریل کالج لندن کے پروفیسر نیل فرگوسن نے کہا ہےکہ سائنسدانوں کی تیار کردہ ایپ کے مطابق برطانیہ میں ہر 10 میں سے ایک شخص کورونا کا شکار ہوچکا ہے جب کہ کورونا سے دو تہائی اموات ایسے افراد کی ہوئی ہیں جو جان لیوا امراض میں مبتلا تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ کورونا کے سبب برطانیہ کو 6 ماہ تک لاک ڈاون کرنا پڑسکتا ہے، طویل لاک ڈاؤن سے ہی ملک میں وبا کی دوسری لہر کو آنے سے روکا جاسکے گا۔

پروفیسر نیل فرگوسن نے مزید بتایا کہ امکان ہے ایسٹر کے موقع پر برطانیہ میں کورونا بحران اپنے عروج پر ہوگا، وبا سے خوفزدہ ہوکربرطانوی شہریوں نے ایک ارب پاؤنڈ کا سامان گھروں میں جمع کرلیا ہے، جن اشیا کا ذخیرہ کیا جارہاہے ان میں وٹامن سی سپلیمنٹ بھی شامل ہیں۔

برطانوی میڈیاکے مطابق نوجوانوں کو سپر مارکیٹوں میں نہ آنے پر زور دیا جا رہا ہے تاکہ اسٹاک ضرورت مند افراد خرید سکیں۔

واضح رہے کہ برطانیہ میں کورونا وائرس کے کیسز کی مجموعی تعداد 11 ہزار سے زائد ہے جب کہ 500 سے زائد افراد جاں بحق ہوچکے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں