Home » رمضان میں اس عمل سے گناہوں کی مغفرت اور آتش دوزخ سے آزادی کا انعام
اسلامیات

رمضان میں اس عمل سے گناہوں کی مغفرت اور آتش دوزخ سے آزادی کا انعام

:* حضرت زید بن خالد الجہنی ؓ سے روایت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم  نے فرمایا : جس شخص نے کسی روزہ دار کو افطار کرایا تو اُس کو روزہ دار کے برابر ثواب دیا جائے گا، بغیر اِس کے کہ روزہ دار کے ثواب میں کوئی کمی کی جائے۔ (ترمذی، ابن ماجہ، صحیح ابن حبان، مسند احمد)

* حضرت سلمان فارسیؓ سے روایت ہے کہ ماہ شعبان کی آخری تاریخ کو رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم  نے ہم کو خطبہ دیا ۔۔۔ اور اسمیں یہ بھی فرمایا:جس شخص نے اس رمضان المبارک کے مہینہ میں کسی روزہ دار کو (اللہ تعالیٰ کی رضا اور ثواب حاصل کرنے کے لئے روزہ) افطار کرایا تو اس کے لئے گناہوں کی مغفرت اور آتش دوزخ سے آزادی کا ذریعہ ہوگا۔ اور اس کو روزہ دار کے برابر ثواب دیا جائے گا، بغیر اس کے کہ روزہ دار کے ثواب میں کوئی کمی کی جائے۔۔۔۔۔۔۔۔ آپ سے عرض کیا گیا کہ یا رسول اللہ ! ہم میں سے ہر ایک کو تو افطار کرانے کا سامان میسر نہیں ہوتا؟ تو آپ ﷺ نے فرمایا : اللہ تعالیٰ یہ ثواب اُس شخص کو بھی دے گا جو دودھ کی تھوڑی سی لسی یا صرف پانی کے ایک گھونٹ سے کسی کا روزہ افطار کرادے۔ ۔۔۔۔ (بیہقی ۔ شعب الایمان)

Add Comment

Click here to post a comment