روح کی غذا – عظمیٰ طارق




ہمارے جسم کی ضرورت ……. تین بارغذا . ہمارے روح کی غذا…….. پانچ بار نمازاورذکر. لیکن آج ہمارے جسم فربہ اور روحیں کمزور…….!! غفلت ہماری !!!!
یہ روح اللہ کی ……. اور جسم سے روح نکل جائے تو انسان اپنے پیارے سے پیارے کو بھی مٹی کے سپرد کردیتا ہے……اس جسم کی آسائش کے لئے ہر وقت کوشاں ……. اور روح کی غذا پہنچانے سے غافل انسان ۔۔۔۔ آج دیکھ تیرا انجام ۔۔۔اس روح ہی کو تو رب کائنات کے پاس جانا ہے ۔۔۔اور اس پہ دنیا کی الائشیں، ھوس پرستی ، خود فرضی، دیں سے دوری ، حسد، کینہ ، اور دنیا جہاں کی برائیاں چمٹی ہوں گی ۔۔۔ تو یہ روح کتنی آلودہ رب کائنات کے پاس جائے گی !!! ابھی بھی وقت ہے اس روح کو توبہ کا غسل دے دیں ، استغفار کے صابن سے دھو ڈالیں……. اس کمزور روح کو توانا کرنے کے لئے پانچ وقت اپنے رب کائنات کے آگے جھک جائیں ۔۔۔۔۔۔
لا تقنطو من رحمت اللہ ۔۔۔۔۔اللہ کی رحمت سے مایوس نہ ہوں ۔۔۔۔اپنی روح کو گناہوں سے پاک کرکے رب العالمین سے ملنے کی تیاری ہوگی ، تو نہ موت کا ڈر ہوگا ۔۔۔۔۔۔ بلکہ حال یہ ہوگا کے شوق وصال میں دل خوشی سے لبریز ہوگا ۔۔۔۔۔۔انشاءاللہ !آج ہم سب توبہ آلنصوح کا عہد کریں ۔۔۔۔ عہد الست کو یاد کرکے اللہ سے سچے دل سے اپنی کوتاہی کا اقرار کریں …….رب کائنات ہم سب کو معاف کردے
کیونکہ اس کے علاوہ کوئ معاف کرنے والا نہیں…..

اپنا تبصرہ بھیجیں