2کروڑماسک اسمگل ہونےکامعاملہ،وزارت صحت کی رپورٹ جمع




اسلام آباد: وزارت صحت نے ملک سے 2کروڑ ماسک اسمگل کرنے کے الزام کے جواب میں اپنی رپورٹ عدالت عظمیٰ میں جمع کرادی ہی۔

سپریم کورٹ میں کورونا وائرس از خود نوٹس کیس کی سماعت ہوئی اور وزارت صحت نے اپنی رپورٹ میں دو کروڑ ماسک اسمگل کرنے کے الزامات  کو بے بنیاد قرار دیا۔

رپورٹ کے مطابق صرف35 لاکھ ماسک چین کی درخواست پر5 چینی کمپنیوں کوبرآمد کیے گئے تھے۔ ماسک برآمدگی سے متعلق معاملے کی تحقیقات ایف آئی اے کررہا ہے۔

سپریم کورٹ کو بتایا گیا کہ ملک میں فیس ماسک کی کمی نہیں اور پروٹوٹائپ وینٹی لیٹرز مقامی سطح پر بنانے کی اجازت بھی دے دی گئی ہے۔

وزارت صحت کی رپورٹ کے مطابق 100لائسنس ہولڈرز کو ڈبلیو ایچ او کےمعیارکےمطابق 300 سینی ٹائزر بنانے کی اجازت بھی دی گئی اور رواں ماہ کے آخر تک 20 ہزار ٹیسٹ کرنے کے اہل ہو جائیں گے۔

پی پی ایز کی قیمت مستحکم رکھنے کے لیے 100سےزائد چھاپے مارے گئے ہیں جب کہ جاں بحق ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل اسٹاف کے لیے خصوصی پیکج بھی تیاری کے مراحل میں ہے۔

The post 2کروڑماسک اسمگل ہونےکامعاملہ،وزارت صحت کی رپورٹ جمع appeared first on ہم نیوز.

اپنا تبصرہ بھیجیں