بلوچستان: جاری لاک ڈاؤن میں 19 مئی تک توسیع




کوئٹہ: بلوچستان میں جاری لاک ڈاوَن میں 19مئی دوپہر12 بجے تک کی توسیع کردی گئی ہے۔

کورونا وائرس، پاکستان میں 476 اموات، 20 ہزار 941 افراد متاثر 

ہم نیوز نے صوبائی وزارت داخلہ کے حوالے سے بتایا ہے کہ لاک ڈاؤن میں توسیع کا فیصلہ کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر کیا گیا ہے۔ صوبائی حکومت نے اس ضمن میں باقاعدہ نوٹی فکیشن بھی جاری کردیا ہے۔

محکمہ داخلہ بلوچستان کی جانب سے جاری کردہ نوٹی فکیشن کے مطابق تمام مذہبی و سیاسی اجتماعات پر لاک ڈاؤن کے دوران مکمل پا بندی عائد رہے گی۔

ہم نیوز کے مطابق صوبائی وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال کی زیرصدارت کورونا کے حوالے سے درپیش صورتحال کا جائزہ لینے کے لیے ایک اعلیٰ سطحی اجلاس بھی منعقد ہوا جس میں تمام متعلقہ حکام نے شرکت کی۔

ذرائع کے مطابق اعلیٰ سطحی اجلاس میں دوران بریفنگ حکام نے بتایا کہ صوبے میں کورونا وائرس کی ٹیسٹنگ کی استعداد بڑھانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

پاکستان میں کورونا کو کنٹرول کرنے میں چین کا اہم کردار ہے، ڈی جی آئی ایس پی آر

ذرائع کے مطابق اجلاس میں اس امر کا بھی جائزہ لیا گیا کہ ٹیسٹوں کی تعداد میں اضافے کے لیے کون سے اقدامات فوری طور پر اٹھائے جا سکتے ہیں؟

ہم نیوز کو ذرائع نے بتایا کہ صوبائی سیکریٹری صحت نے دوران بریفنگ کہا کہ کوشش ہے کہ ایک دن میں 600 ٹیسٹ کرنے کی صلاحیت حاصل کرسکیں۔

وزیراعلیٰ جام کمال کی زیر صدارت منعقدہ اعلیٰ سطحی اجلاس میں حکام نے اس امر پر گہری تشویش ظاہر کی کہ کورونا کیسز کا مقامی سطح پر پھیلاؤ ہو رہا ہے۔

ہم نیوز کے مطابق اجلاس میں محکمہ صحت کو ہدایت کی گئی کہ وہ فوری طور پر وی ٹی ایم کٹس کی خریداری کا آغاز کرے۔

سیکریٹری صحت نے اس موقع پر اجلاس میں بتایا کہ محکمہ صحت کووی ٹی ایم کٹس کی خریداری کے لیے فنڈز بھی جاری کیے جا چکے ہیں۔

بلوچستان میں کورونا کے مزید 46 کیسز سامنے آ گئے

ہم نیوز کے مطابق وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال کی زیر صدارت منعقدہ اجلاس میں ہدایت کی گئی کہ خضداراورلورالائی میں پی سی آرمشین فراہم کی جائیں۔

The post بلوچستان: جاری لاک ڈاؤن میں 19 مئی تک توسیع appeared first on ہم نیوز.

اپنا تبصرہ بھیجیں